showcase demo picture

ڈاکٹر بنارس خان اعوان، واہ کینٹ کلکیریا ۔ part-2

ڈاکٹر بنارس خان اعوان، واہ کینٹ
ڈاکٹر ملک مسعود یحیےٰ
تلخیص و ترجمہ جارج وتھالکس۔
part-2

اگر ڈاکٹر مریض کو یقین دلانے کی کوشش کرتا ہے کہ اس کا مرض زیادہ سنجیدہ نہیں ہے اور غالباً ان سب معاملات میں اس کیلئے کچھ کیا جاسکتا ہے تو مریض کو یہ الفاظ سنائی نہیں دیں گے۔مریض بار بار دہراتا ہے کہ اس کیلئے کوئی امید نہیں ہے اور اسے شفایاب نہیں کیا جاسکتا۔ مریض اسے حقیقت جانتا ہے۔
آرسنک اور کلکیریا میں یہ بہت ہی نمایاں علامت ہے لیکن کلکیریا میں اور بھی بہت سے خوف موجود ہیں۔ بہت حد تک ممکن ہے کہ کلکیریا کی مریضہ آپ سے مشورہ کیلئے آئے او ر زور زور سے رونا شروع کردے اور روتی ہی چلی جائے۔ اگر آپ اس سے پوچھیں کہ کیا مسئلہ ہے پھر آپ جاننے کی کوشش کرتے ہیں اور تلاش کرتے چلے جاتے ہیں۔ مریضہ آپ کو فوراً نہیں بتائے گی کہ وہ کیوں رورہی ہے ۔ وہ صرف یہ محسوس کرتی ہے کہ اس کی صحت کے حوالے سے اس کے اندر کچھ ہورہا ہے جو کہ بہت نازک اور سنجیدہ ہے کہ کوئی بھی اس کی مدد نہیں کرسکتا۔
آپ کے پاس ایسے مریض آتے ہیں اور آپ شاید محسوس نہیں کر پاتے کہ ان کے اندر اس طرح کا تصور موجود ہے۔ وہ آپ کے پاس آتے ہیں اور بتاتے ہیں میرے رونے کی کوئی وجہ نہیں ہے میں نہیں جانتی کہ مجھے کیا ہورہا ہے۔ مریض روتے ہیں اور آپ دیکھتے ہیں کہ مریض دکھ میں ہے ۔ آپ تلاش کرنا چاہتے ہیں کہ مریض کو کیا دکھ ہے۔ آخر کار آپ کو معلوم ہوجاتا ہے کہ سب سے بڑا خوف پاگل ہوجانے کا ہے۔ مریض خوف زدہ ہوتے ہیں کہ وہ پاگل ہوجائیں گے۔ وہ سمجھتے ہیں کہ ان کا دماغ توڑ پھوڑ کا شکار ہورہا ہے کوئی ان کی مدد نہیں کرسکتا۔ آخر کار ان کو پاگل خانے میں پناہ ملے گی۔ جہاں کوئی بھی ان کی مدد نہیں کرسکے گا۔
مریض کی عام حالت یہ بھی ہے کہ اسے احساس ہوتا ہے کہ وہ واقعی ذہنی طور پر پاگل ہورہا ہے اور اسے اس بات کا یقین نہیں ہوتا کہ اس کا ذہن موجودہ حالات کے اندر کام کرسکتا ہے۔ مریض کا دماغ کمزور ہوتا ہے اور وہ اہم باتوں کو بھول جاتا ہے۔ چھوٹی چھوٹی چیزیں اس کے ذہن پر قبضہ جمالیتی ہیں اور اہم مسائل اسی طرح غیر حل شدہ رہتے ہیں۔ مریض اس قابل نہیں ہوتا کہ ارتکاز کرسکے اپنے کاروباری مسائل کو حل کرسکے۔ یوں تناؤ جاری رہتا ہے۔
شاید مریض اپنا کاروبار چھوڑ چکا ہو یا اس نے کاروبار نہ چھوڑا ہو تاہم اخراجات بڑھتے رہیں گے اور اس کو اپنے بل ادا کرنے ہوں گے اور نتیجتاً مریض مایوس ہوجاتا ہے۔
جاری ہے ۔ ۔ ۔ ۔ ۔

Posted in: Uncategorized, Urdu
Return to Previous Page

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Theme Features

Welcome to the Zen Theme which is best used for personal blogging. Here is a list of some of the special features you will be able to take advantage of when customizing your website and blog:
  • Theme Control panel
  • Customize colours, layout, buttons, and more
  • Dynamic widgets with varied widths
  • Up to 8 Widget Positions
  • Built-in Social Networking
  • Google Fonts for Headings and site title
  • and a lot more...

Relax With Herbal Teas

When enjoying your moment of zen, it's best to enjoy fresh herbal teas for relaxation. Of course, choosing the right zen teas requires the expertise of asian herbalists.

Recent Posts

Check out the recent articles posted here at Zen and keep up to date with the latest news and information about having a zen lifestyle.